مظفر گڑھ ، شادی کی تقریب میں خواتین کو چائے میں زہر دینے کا انکشاف

تقریب کے دوران مبینہ طور پر چائے پینے سے ایک خاتون جاں بحق،دوسری کی حالت غیر ہو گئی

0 102

مظفر گڑھ میں ایک انتہائی عجیب واقعہ پیش آیا ہے

 
مظفر گڑھ (اردو نیوز) : مظفر گڑھ میں ایک انتہائی عجیب واقعہ پیش آیا ہے جہاں چائے پینے سے خاتون کی جان چلی گئی۔پولیس حکام کا کہنا ہے مظفر گڑھ میں ایک شادی کی تقریب جاری تھی۔اس دوران مبیبہ طور پر چائے پینے سے دو خواتین کی حالت غیر ہو گئی جن میں سے ایک جاں بحق ہو گئی جب کہ دوسری خاتون کو فوری طور پر اسپتال منتقل کیا گیا ہے جہاں اس کا علاج جاری ہے۔
متاثرہ خواتین کے اہلخانہ نے الزام عائد کیا ہے کہ دونوں کو مبینہ طور پر چائے میں زہر ڈال کر پلایا گیا ہے۔پولیس حکام نے خاتون کے اہلخانہ کی درخواست پر معاملے کی تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے۔جاں بحق ہونے والی خاتون کا پوسٹ مارٹم کیا جائے گا جس کے بعد ہی مزید حقائق سامنے آئیں گے۔تاہم اس واقعے نے شادی میں شریک مہمانوں کو بھی شش و پنج میں مبتلا کر دیا۔
 
جب کہ شادی کے دوران خاتون کے جاں بحق ہونے سے خوشیاں بھری تقریب غم میں بدل گئی،اس سے قبل بھی ایسے واقعات پیش آتے رہے ہیں جن میں بازاروں میں زہریلی اشیاء کھانے سے لوگوں کی حالت غیر ہو جاتی تھی۔ سرگودھا کی تحصیل بھلوال میں زہریلا کھانا کھانے سے اہل خانہ کی حالت غیر ہو گئی تھی جب کہ دس سالہ بچی جاں بحق ہو گئی تھی
 
زرائع کے مطابق مقامی تحصیل بھلوال غلہ منڈی کے حنیف سبزی فروش کے 4 بچوں سمیت اہل خانہ کی گھر میں کھانا کھانے سے حات غیر ہو گئی جن ک تشویشناک حالت کے باعث تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال بھلوال منتقل کردیا گیا جہاں دس سالہ عالیہ بی بی دم توڑ گئی جبکہ دو بچوں علی، برہان اور والد حنیف کو انتہائی تشویشناک حالت میں ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ٹیچنگ ہسپتال سرگودھا ریفر کر دیا گیا جبکہ ایک بچی مریم اور والدہ فوزیہ بیگم کو ابتدائی طبی امداد فراہم کر دی گئی ۔
انتظامیہ نے گھر سے زہریلا کھانا قبضے میں لے کر معائنہ کیلئے لیبارٹری بھجوا دیا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.